30

بھارتی فوج کا ہیلی کاپٹر ‘ لداخ ‘ میں گر کر تباہ ہو گیا

(الحبر نیوز آن لائن ) کشمیر کے علاقے ‘ لداخ کے علاقے میں بھارتی ہیلی کاپٹر گر کر تباہ ہو گیا جبکہ ہیلی کاپٹر میں پائلٹ اور بھارتی فوج کے 2 جرنیلوں سمیت 7 لوگ سوار تھے۔

اور ہیلی کاپٹر گرنے سے پورے علاقے میں دھوئیں کے بادل چھا گئے۔ ہیلی کاپٹر گرنے کی وجوہات کا پتہ لگایا جا رہا ہے کہ ہیلی کاپٹر گرنے کا واقعہ کیوں کر پیش آیا۔ ہیلی کاپٹر میں لیفٹیننٹ جنرل اوپدھیا اور میجر جنرل سنویت سنگھ حادثے کا شکار ہونے والے ہیلی کاپٹر میں سوار تھے۔

جنرل کے ایس اوپدھیا بھارت کی 14 ویں کمانڈ کے کور کمانڈر تھے ۔ جبکہ جنرل سنویت سنگھ آرمی کی تیسری انفینٹری کے کمانڈر تھے ۔ حادثہ لداخ سے 40 کلومیٹر دور منگل کی دوپہر ڈیڑھ بجے کے قریب پیش آیا ،ہیلی کاپٹرتباہ ہوگیا جبکہ دونوں پائلٹس کو معمولی چوٹیں آئیں۔ ہیلی کاپٹر میں سوار دونوں جنرلز اور عملے کے دیگر افراد محفوظ رہے۔

کشمیر: مقامی کرکٹ ٹیم گرفتار پاکستانی ترانہ گانے پر

کشمیر کے دارالحکومت سرینگر کے مشرقی ضلع گاندربل میں پولیس نے 12سے زیادہ کرکٹ کھلاڑیوں کو گرفتار کرلیا ۔
اوران پر الزام ہے کہ، انھوں نے ایک کرکٹ میچ کے دوران پاکستانی کرکٹ ٹیم کی وردی پہنی اور مقابلے سے پہلے پاکستان کا قومی ترانہ ‘پاک سرزمین’ گایا تھا۔
ضلع سربراہ فیاض احمد نے بتایا کہ یہ انکشاف ایک واٹس اپ ویڈیو کلپ سے ہوا تو پولیس فوراً حرکت میں آگئی اور ایک تفتیشی ٹیم بنائی ،جس کے بعد کئی جگہوں پر چھاپے مارکر ٹیم کے تقریباً سبھی کھلاڑیوں کو گرفتار کرلیا گیا۔
پولیس کواب اس میچ کا اہتمام کرنے والے دو نوجوانوں کی تلاش ہے جن میں سے ایک کا تعلق۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔اورپولیس کا کہنا ہے، کہ کھلاڑیوں کا کوئی پولیس ریکارڈ نہیں ہے بہرحال یہ معلوم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے کہ نوجوانوں کو اُکسانے کے پیچھے کوئی تخریبی منصوبہ تو نہیں ہے۔
یاد رہے کہ کشمیر میں احتجاجی مظاہروں کے دوران پاکستانی پرچم لہرانے کا عام رجحان ہے۔ دیکھنےوالے کہتے ہیں کہ یہاں کے لوگ پاکستانی ترانہ گا کر یا پاکستانی پرچم لہرا کر دراصل حکومت ہند کو چڑانا چاہتے ہیں تاکہ وہ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں